بروقت انتخابات سے عمران خان کو کیا نقصان ہوگا؟ بلاول بھٹو نے کہانی بتا دی

پاکستان
29 دسمبر 2022 | 38 : 6 - شام

پاکستان(کھوجی ٹی وی) پاکستان پیپلز پارٹی کے شریک چیئرمین اور وفاقی وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری کی جانب سے لڑکانہ میں میڈیا سے گفتگو کے دوران نیا بیان سامنے آیا ہے۔

 

تفصیلات کے مطابق لڑکانہ میں میڈیا سے گفتگو کے دوران بلاول بھٹو زرداری کا کہنا تھا کہ اگر ملک میں بروقت انتخابات ہوئے تو تب عمران خان کے سہولت کار نہیں رہیں گے۔ اپنی گفتگو میں ان کا کہنا تھا کہ عمران خان دوبارہ آمریت کا دروازہ کھولنا چاہتے ہیں اور ایک بار پھر بیک ڈور سے آکر وزیر اعظم بننا چاہتے ہیں۔ پہلے عمران خان نے یہ سازش کی کہ اسٹیبلسمنٹ میں موجود ان کے سہولتکاروں کی موجودگی میں ہی انتکخابات ہوں اور وہ اس طرح کامیاب ہوجائیں۔

 

بلاول بھٹو زرداری کا مزید کہنا تھا کہ اسٹیبلشمنٹ میں موجود ان کے سہولت کار چلے گئے ہیں لیکن شاید کسی اور ادارے میں اب بھی ان کے سہولتکار موجود ہیں۔ انہوں نے مزید بتایا کہ ماضی میں کسی بھی حکومت نے آئینی مدت پوری نہیں کی لیکن ہم نے اس کو یقینی بنایا۔ اس سے پہلے 2007 سے 2013 تک اور اب 2023 تک پارلیمان اپنی آئینی مدت پوری کرنے جارہی ہے۔

 

لڑکانہ میں گفتگو کے دوران وفاقی وزیر خارجہ بلاول بھٹو نے بتایا کہ ملک میں سیلاب، معاشی بدحالی اور بے روزگاری کے باوجود عمران خان چاہتے ہیں کہ پارلیمنٹ اپنی مدت پوری نہ کرے اور جمہوریت کی ترقی نہ ہو اس کے لئے وہ ہر طرح کے ہتھکنڈے استعمال کر رہا ہے۔

آرٹیکل کا اختتام

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے